دوران حمل غذا

حمل کے دوران پیش آنے والے مسائل اور عمومی احتیاط - قسط 1

اکثر عورتوں کی صحت حمل کے دوران ٹھیک رہتی ہے لیکن بعض کو کچھ شکایتیں بھی ہوجاتی ہیں۔ خصوصاً ان عورتوں کو جنہیں مجبوراً دیر تک کھڑا رہنا پڑتا ہو یا جو پہلے سےکسی مرض میں مبتلا ہوں۔ اگر احتیاط کی جائے تو ان مسائل سے بچا جا سکتا ہے۔ نیز حمل کو دوران بہت سی جسمانی تبدیلیاں رونما ہوتی ہیں۔ پیٹ کی جلد پر کھچاؤ آنے کے نشانات اور

حمل میں دوگنا خوراک حقیقت یا خام خیالی

عورتوں میں یہ خیال عام ہے کہ حاملہ کو دوگنی خوراک کھانی چاہیے ایک اپنے حصے کی اور ایک بچے کے حصے کی۔دوسری طرف کچھ عورتوں کہتی ہیں کہ اگر حاملہ زیادہ کھائے گی تو بچہ بہت موٹا ہوجائے گا اور پیدائش کے وقت سخت تکلیف ہوگی۔ یہ باتیں لاعلمی اور جہالت پر مبنی ہیں۔ بچے کو ماں کے خون کے ذریعے سیال غذا پہنچتی ہے اور خوارک کی کمی

دوران حمل فالک ایسڈ کیوں انتہائی اہم ہے؟

حمل میں فولک ایسڈ کی بہت زیادہ اہمیت ہے۔ بچے کے دماغ اور ریڑھ کی ہڈی کی بہتر نشونما کے لیےڈاکٹر روزانہ کم از کم ۴00 مائیکرو گرام فالک ایسڈ کھانے کے مشورہ دیتے ہیں۔ اس لیے یہ انتہائی ضروری ہے کہ آپ فالک ایسڈ کو روزانہ اپنی خوراک کا حصہ بنائیں۔ فالک ایسڈ کیا ہے؟ فالک ایسڈ وٹامن بی9 کی مصنوعی قسم ہے جسے فولیٹ Folateبھی کہتے ہیں۔ فولیٹ